عنوان: ظہر کی سنت اور فرض کے درمیان نفل پڑھنا(102688-No)

سوال: حضرت مفتی صاحب! یہ بتادیں کہ کیا ظہر کی سنت اور فرض کے درمیان نفل پڑھے جاسکتے ہیں؟

جواب: ظہر کی چار رکعت سنتِ مؤکدہ پڑھنے کے بعد چار رکعت فرض سے پہلے اگر کوئی شخص نفل پڑھنا چاہے، تو اس وقت میں نفل پڑھنا جائز ہے۔ 

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:
وفی فتح القدیر:
الصحیح الاولی الاستدلال بمجموع الحدیثین، حدیث ابن عمر وحدیث عائشہ، اما بان الاربع کان یصلیہا فی بیتہ لانہ ﷺ کان یصلی الکل فی البیت ثم کان یصلی رکعتین تحیۃ المسجد فکان ابنِ عمر یراھما۔(ج:1 ص:459، کتاب الصلاۃ)
واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی

(مزید سوالات و جوابات کیلئے ملاحظہ فرمائیں)
http://AlikhlasOnline.com

نماز میں مزید فتاوی

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Salath (Prayer)

29 May 2020
جمعہ 29 مئی - 5 شوّال 1441

Copyright © AlIkhalsonline 2020. All right reserved.

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com