عنوان: کیا یوسف علیہ السلام کی رحمت نام کی کوئی بیٹی تھی؟(107252-No)

سوال: میری ایک عالم سے دوستی ہے، جنہیں تاریخی کتابیں پڑھنے کا بہت شوق ہے، وہ بتارہے تھے کہ حضرت یوسف علیہ السلام کی زلیخا سے رحمت نامی بیٹی تھی، کیا یہ بات درست ہے؟

جواب: یوسف علیہ السلام کے بیٹے افراثیم کی بیٹی کا نام رحمت تھا، لیکن زلیخا سے یوسف علیہ السلام کی رحمت نام کی کوئی بیٹی نہیں تھی، گویاکہ آپ علیہ السلام کی پوتی کا نام رحمت تھا۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

کما فی روح المعانی:

واخرج ابن جریر عن ابن اسحاق قال :ذکروا ان قطفیر ھلک فی تلک اللیالی وان الملک زوج یوسف امرأتہ راعیل فقال لھا حین ادخلت علیہ: ألیس ھذا خیرا مماکنت تریدین ؟………فیزعمون انہ وجدھا عزراء فاصابھا فولدت لہ رجلین افراثیم ومیشا۔

(ج: 13، ص: 45)

وفی البدایۃ والنھایۃ:

فی قصۃ ایوب علیہ السلام ……وامرأتہ قیل لیا بنت یعقوب وقیل رحمۃ بنت افراثیم۔

(ج: 1، ص: 206)

کذا فی نجم الفتاوی:

(ج: 1، ص: 546)

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی

Print Full Screen Views: 419
kia yousuf alaihissalama ki rahmat name ki koi beeti thi?

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Miscellaneous

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2022.