عنوان: جماع (ہمبستری) کی صورت میں منی نہ نکلے، تو کیا مرد اور عورت پر غسل کرنا فرض ہوگا؟(108828-No)

سوال: اگر مرد اور عورت آپس میں ایک دوسرے سے ملیں اور ان کی منی نہ خارج ہو، تو کیا ان پر غسل واجب ہو سکتا ہے؟

جواب: مرد کا حشفہ (عضو مخصوص کا سر) عورت کی شرمگاہ میں داخل ہوتے ہی مرد اور عورت دونوں پر غسل کرنا فرض ہوجاتا ہے، چاہے منی خارج ہو یا نہ ہو۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

الفتاوی الھندیۃ: (14/1، ط: رشیدیۃ)
المعاني الموجبة للغسل وهي ثلاثة منها الجنابة ۔۔۔ السبب الثاني الايلاج ، الايلاج في احد السبيلين اذا توارت الحشفة يوجب الغسل ۔۔۔ الخ

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 492
jima / hambistari ki sorat me / mein mani / na nikle,to / too kia mard / admi / man or orat / woman per / par ghusal karna farz hoga?

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Purity & Impurity

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2022.