عنوان: سن لارڈ (Sunlord) نامی کمپنی کی گھڑی پہننے کا حکم(10068-No)

سوال: سن لارڈ (Sunlord) کمپنی کی گھڑی پہن سکتے ہیں یا نہیں؟
تنقیح:
محترم آپ کا سوال واضح نہیں ہے، اس کمپنی کی کسی مخصوص گھڑی کے بارے میں سوال پوچھنا مقصود ہے یا اس کمپنی کی کوئی بھی گھڑی استعمال کرنے کے بارے میں شرعی حکم معلوم کرنا چاہتے ہیں؟ نیز اس میں اگر کوئی وجہ اشکال (جس کی وجہ سے آپ سوال کر رہے ہیں) آپ کے ذہن ہے تو وہ بھی واضح کرکے بتائیں، اس کے بعد آپ کے سوال کا جواب دیا جائے گا۔
جزاک اللہ خیرا
جواب تنقیح: حضرت جی! میں اس لیے پوچھ رہا ہوں کہ عام انگریزی کے لحاظ سے sunlord کے معنی سورج کو خدا ماننے کے نکلتے ہیں(نعوذ باللہ) اس وجہ سے کیا ایسی کمپنی جس کا نام sunlord ہے اس کی گھڑی استعمال کرنا جائز ہے؟

جواب: گھڑی پہننا بذات خود جائز ہے، نیز اگر کسی کمپنی کے نام کے معنی غلط ہوں تو محض اس وجہ سے اس کمپنی کی گھڑی پہننے کو ناجائز یا حرام نہیں کہا جائے گا۔
البتہ اگر واقعتاََ اس کمپنی کے نام سے شرکیہ معنی نکلتے ہوں، (جیسا کہ سوال میں ذکر ہے، جبکہ Sunlord کے ایک معنی "سورج کا مالک" کے بھی آتے ہیں) اور یہ نام رکھنے سے کمپنی کا مقصود بھی شرکیہ نظریہ کی تشہیر و ترویج ہو تو پھر ایسی صورت میں ایسے نام والی گھڑی کے استعمال سے اجتناب کرنا بہتر ہوگا۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

ردالمحتار :(مطلب المختار ان الاصل فی الاشیاء الاباحة، 78/1)
مطلب المختار ان الاصل فی الاشیاء الاباحة، اقول : وصرح فی التحریر بان المختار ان الاصل الاباحة عند الجمهور من الحنفیة والشافعی

و فیه ایضا:
(قوله فالتعریف بناء علیه) ای علی ان الاصل الاباحة اقول هذا الجواب نافع فیما سکت عنہه الشارع وبقی علی الاباحة الاصلیة اما مانص علی اباحته او فعله علیه السلام فلا ینفع وقد نص فی التحریر علی ان المباح یطلق علی متعلق الاباحة الاصلیة کما یطلق علی متعلق الاباحة الشرعیة فالاحسن فی الجواب ان یقال المراد بقوله فی التعریف ماثبت ثبوت طلبه لا ثبو ت شرعیة والمباح غیر مطلوب الفعل وانما هو مخیر فیه۔

فقه البیوع: (193/1، ط: مکتبه دار العلوم کراتشی)
وان کان سببا بعیدا بحیث لا یفضی الی المعصیۃ علی حالتھا الموجودۃ بل یحتاج الی احداث صنعۃ فیہ کبیع الحدید من أھل الفتنۃ وأمثالھا، فتکرہ تنزیھا

واللہ تعالیٰ أعلم بالصواب
دار الافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 429 Dec 22, 2022
sunlord nami company ki ghari / watch pehenne ka hokom / hokum

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Prohibited & Lawful Things

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.