عنوان: گاڑیوں پر بنی ہوئی جاندار چیز کی تصویر کا حکم(2303-No)

سوال: السلام علیکم، بعض اوقات ایسی تصویر بنائی جاتی ہے، جس میں آنکھوں اور ناک کی جگہ نقطے لگا دیئے جاتے ہیں تو کیا ایسا کرنا جائز ہے؟
دوسرا یہ کہ بعض اوقات آنکھیں نہیں بنائی جاتی، بلکہ آنکھوں کی جگہ sun glasses بنا دیے جاتے ہیں تو ایسا کرنا کیسا ہے؟

جواب: اگر دیکھنے میں جاندار کی تصویر واضح طور پر مترشّح ہوتی ہو، تو وہ تصویر کے حکم میں ہے ۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

شرح معانی الآثار: (287/4، ط: دار عالم الکتب)
عَنْ أَبِی ہُرَیْرَةَ قَالَ: الصُّورَةُ الرَّأْسُ , فَکُلُّ شَیْءٍ لَیْسَ لَہُ رَأْسٌ , فَلَیْسَ بِصُورَةٍ․

رد المحتار: (باب ما یفسد الصلاۃ و ما یکرہ فیھا، 433/2، ط: دار عالم الکتب)
وقید بالرأس؛ لأنہ لا اعتبار بإزالة الحاجبین أو العینین؛ لأنہا تعبد بدونہا، وکذا لا اعتبار بقطع الیدین أو الرجلین۔

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 939 Oct 21, 2019
gaariyo par / per bani hoi jandaar / jandar cheez ki tasveer ka hukum / hukm, Ruling on the image of a living thing made on vehicles

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Prohibited & Lawful Things

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.