عنوان: جاندار کی تصویر والا کمبل استعمال کرنے کا حکم(2795-No)

سوال: حضرت ! بچے کے لیے بلینکٹ خریدا اور گھر آ کے جب کھول کے دیکھا تو اس میں تصویر بنی ہوئی تھی، پیکنگ کھلنے کی وجہ سے واپس یا تبدیل نہیں ہو سکتا تو اس صورت میں کیا کرا جائے؟ رہنمائی فرمادیں۔

جواب: واضح رہے کہ اگر کمبل پر جاندار کی تصویر بنی ہوئی ہے، تو ایسے کمبل کا استعمال درست نہیں ہے، البتہ اگر کمبل پر موجود تصویر کے سر کو کسی چیز سے چھپا یا مٹا دیا جائے، تو ایسی صورت میں کمبل کو استعمال کرنا درست ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

مشکوۃ المصابیح: (باب التصاویر، الفصل الاول)
عبداللّٰہ بن مسعود قال سمعت رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم یقول اشدالناس عذابا یوم القیامۃ المصورون۔

الدر المختار مع رد المحتار: (مطلب اذا تردد الحکم بین سنۃ و بدعۃ، 418/2، ط: زکریا)
اومقطوعۃ الرأس اوالوجہ اوممحوۃ عضولاتعیش بدونہ لایکرہ، سواء کان من الاصل او کان لہا رأس ومحی وسواء کان القطع بخیط خیط علی جمیع الرأس حتی لم یبق لہ اثر اویطلیہ بمغرۃ او بنحتہ او بغسلہ لانہا لاتعبد بدون الرأس عادۃ،

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 1315 Dec 07, 2019
jandar ki tasweer / tasveer / photo / picture wala cambal / kambal estimal karne / karney ka hokom / hokum, Ruling / Order to use a blanket with a picture of an animal

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Prohibited & Lawful Things

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.