عنوان: کرونا وائرس کے پھیلاؤ کے پیشِ نظر گھر میں نماز پڑھنا(103876-No)

سوال: السلام علیکم، مفتی صاحب ! موجودہ حالات(کروناوائرس سے حفاظتی اقدام کے پیشِ نظر) میں گھر میں نماز پڑھ سکتے ہیں؟

جواب: اگر حکومت لوگوں کے اختلاط پر مکمل پابندی لگا دے تو مسجد میں جماعت نہ ہونے اور گھر پر نماز پڑھنے پر اہل محلہ گنہگار نہیں ہوں گے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:
لما فی عمدة القاري (6 / 146):

"وكذلك ألحق بذلك بعضهم من بفيه بخر، أو به جرح له رائحة، وكذلك القصاب والسماك والمجذوم والأبرص أولى بالإلحاق، وصرح بالمجذوم ابن بطال، ونقل عن سحنون: لاأرى الجمعة عليه، واحتج بالحديث. وألحق بالحديث: كل من آذى الناس بلسانه في المسجد، وبه أفتى ابن عمر، رضي الله تعالى عنهما، وهو أصل في نفي كل ما يتأذى به".

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی

(مزید سوالات و جوابات کیلئے ملاحظہ فرمائیں)
http://AlikhlasOnline.com

نماز میں مزید فتاوی

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Salath (Prayer)

02 Apr 2020
جمعرات 02 اپریل - 8 شعبان 1441

Copyright © AlIkhalsonline 2020. All right reserved.

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com