عنوان: گھر کی دیوار پر قرآنی آیات لٹکانا (5280-No)

سوال: مفتی صاحب! اکثر گھروں میں لوگ دیوار پر آیت الکرسی یا اور دوسری قرآنی آیات وغیرہ کا فریم لٹکاتے ہیں، کیا اس طرح قرآن کریم کی آیات کو دیوار پر لٹکانا درست ہے؟

جواب: قرآن کریم کا ادب و احترام ہر مسلمان پر لازم ہے، اس لئے ایک مسلمان کو ہر اس کام سے بچنا چاہیے جس میں قرآن کریم کی بے ادبی ہو، لہذا اگر بے ادبی کا احتمال نہ ہو، تو برکت کے لیے گھر کی دیوار پر قرآنی آیات کو لٹکانا جائز ہے، لیکن اگر کہیں بے ادبی کا احتمال ہو، تو وہاں قرآنی آیات کو لٹکانے سے گریز کرنا چاہیے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

الھندیة: (70/1)

ولیس بمستحسن کتابۃ القراٰن علی المحاریب والجدران لمایخاف من سقوط الکتابۃ وان توطأالیٰ ان قال فالواجب ان یوضع فی اعلیٰ موضع فوقہ شیٔ وکذایکرہ کتابۃ الرقاع والصاقھا بالابواب لمافیہ من الاھانۃ کذا فی الکفایۃ اھ

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 1860 Sep 28, 2020
ghar ki deewaar par quraani aayaat latkana, Hanging Quranic verses on the wall of the house

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Prohibited & Lawful Things

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.