عنوان: پولیس والوں کو مقررہ جرمانے سے کم دینےکا حکم(107084-No)

سوال: مفتی صاحب ! میرے پاس ڈرائیونگ لائیسنس نہیں ہے، اگر ٹریفک پولیس والے چالان کریں تو پانچ سو (500) کا چالان بنتا ہے، کیا اس سے کم پیسوں پر ٹریفک پولیس والوں سے (Deal) ڈیل کرنا جائز ہے؟

جواب: کاغذات مکمل نہ ہونے یا ٹریفک قوانین پر عمل نہ کرنے کی صورت میں ٹریفک قوانین کے مطابق جو چالان بنتا ہے، اس سے کم پیسوں پر ٹریفک پولیس والوں سے (Deal) ڈیل کرنا، رشوت کے زمرے میں داخل ہے، لہذا صورت مسئولہ میں رشوت دینے والا اور لینے والا دونوں حرام کے مرتکب ہونگے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

کذا فی سنن أبی داوٗد:

عن عبداللہ ابن عمرو قال: لعن رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم علی الراشی والمرتشی.

(باب فی الکراھیۃ علی الرشوۃ، ج2، ص148، ط:نعمانیۃ)

وکذا فی الشامیۃ:

و فی المصباح:الرشوۃ بالکسر: ما یعطی الشخص الحاکم وغیرہ لیحکم لہ،أو یحملہ علی ما یرید….ولا یجوز أخذ المال لیفعل الواجب.

(کتاب القضاء، ج5، ص362،ط:سعید)

واللہ تعالی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی

Print Full Screen Views: 253
police walon ko muqarrara jurmanay say kam dene ka hukum

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Loan, Interest, Gambling & Insurance

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2022.