عنوان: حرام جانور کی کھال سے بنی بیلٹ (Belt) پہن کر نماز پڑھنا (107205-No)

سوال: کیا حرام جانور کی کھال سے بننے والی بیلٹ پہن کر نماز پڑھنا جائز ہے۔

جواب: صورت مسئولہ میں اگر وہ کھال خنزیر کی نہیں ہے، اور اس حرام جانور کو شرعی طریقہ سے ذبح کیا گیا ہو، یا اگر شرعی طریقہ سے ذبح نہیں کیا گیا، لیکن اس کی کھال کو دباغت دی گئی ہو، تو وہ کھال پاک ہوگئی ہے، اس کھال سے بنی بیلٹ پہن کر نماز پڑھنا جائز ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

قال صاحب الھدایہ:

وکل إھاب دبغ فقد طھر وجازت الصلاة فیہ، و الوضعی منہ، آلا جلد الخنزیر و الآدمی۔

(ج:1، ص: 39، ط: مکتبہ رحمانیہ)

و قال صاحب الھدایہ ایضا:

و إذا ذبح مالا یوکل لمحہ، طھر جلدہ و لحمہ، إلا الآدمی و الخنزیر۔

(ج:4، ص: 441، ط: مکتبہ رحمانیہ)

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی
Print Views: 49

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Salath (Prayer)

Copyright © AlIkhalsonline 2021. All right reserved.

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com