عنوان: کسی کے نام کے ساتھ "حضرت اقدس" یا "حضرت مولانا" لکھنے اور کہنے کا حکم(7469-No)

سوال: کیا کسی عالم، بزرگ یا استاد کے نام کے ساتھ "حضرت اقدس" یا "حضرت مولانا" لکھنا یا کہنا کیسا ہے؟

جواب: "حضرت اقدس" یا "حضرت مولانا" جیسے تعظیمی الفاظ کسی عالم، بزرگ یا استاد کے نام کے ساتھ کہنا یا لکھنا شرعا جائز ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

روح المعانی: (155/26)
وقد صرحوا بان التلقیب بالقاب الحسنۃ مما لاخلاف فی جوازہ وقد لقب ابوبکرؓ بالعتیق لقولہ علیہ الصلوۃ و السلام لہ :انت عتیق اﷲ من النار …… وما زالت الالقاب الحسنۃ فی الامم کلھا من العرب و العجم تجری فی مخاطباتھم و مکاتباتھم من غیر نکیر، ولا فرق بین اللقب والکنیۃ۔

الفتاوی الھندیۃ: (378/5، ط: دار الفکر)
ولوقال لاستاذہ مولانا لابأس وقد قال علی ؓ لابنہ الحسن ؓ قم بین یدی مولاک عنی استاذہ۔

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 1062 May 12, 2021
kisi kay naam kay sath hazrat aqdas ya hazrat molana likhnay or kehne ka hukum, Order / ruling to write and say "Hazrat Aqdas" or "Hazrat Maulana" with someone's name

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Prohibited & Lawful Things

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.