عنوان: ٹانگ پر ٹانگ رکھ کر بیٹھنا کیسا ہے؟(7668-No)

سوال: مفتی صاحب ! ٹانگ پر ٹانگ رکھ کر بیٹھنا کیسا ہے، بعض لوگ اسے معیوب سمجھتے ہیں؟

جواب: ٹانگ پر ٹانگ رکھ کر بیٹھنا شرعاً ممنوع نہیں ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

القرآن الکریم: (الحج، الآیۃ: 78)
وَ مَا جَعَلَ عَلَیۡکُمۡ فِی الدِّیۡنِ مِنۡ حَرَجٍ ؕ۔۔۔الخ

کذا فی فتاوی دار العلوم دیوبند: رقم الفتوی: 182-108/03/1442

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 1478 May 28, 2021
taang par taang rakh kar bethna kaisa hai?, What is it like to sit cross legged?

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Prohibited & Lawful Things

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.