عنوان: مرد کا اپنے زیرناف بالوں کو کریم وغیرہ سے صاف کرنا (108858-No)

سوال: مرد کا اپنے زیرناف بالوں کو بلیڈ کے بجائے رمورکریم سے صاف کرنا کیسا ہے؟

جواب: مرد کے لئے مستحب یہ ہے کہ زیرِ ناف بال استرے سے صاف کرے، تاہم اگر کوئی کریم یا پاؤڈر وغیرہ استعمال کرتا ہے، تو یہ بھی جائز ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

المرقاۃ: (رقم الحدیث: 4420، ط: دار الکتب العلمیۃ)
’’الاستحداد‘‘: أي حلق العانۃ، وہو استفعال من الحدید، وہو استعمال الحدید من نحو الموسیٰ في حلق العانۃ ذي الشعر الذي حوالي ذکر الرجل وفرج المرأۃ، زاد ابن شریح: وحلقۃ الدبر، فجعل العانۃ منبت الشعر مطلقًا، والمشہور: الأول، فإن أزال شعرہ بغیر الحدید لا یکون علی وجہ السنۃ۔

رد المحتار: (406/6، ط: سعید)
قوله: (ويستحب حلق عانته) قال في الهندية: ويبتدئ من تحت السرة ولو عالج بالنورة يجوز، كذا في الغرائب وفي الأشباه

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 292
mard ka apne zer naaf balo ko creem waghaira se / say saf karna

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Characters & Morals

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2022.