عنوان: شوہر کی میراث میں سے حق مہر وصول کرنا (1456-No)

سوال: سوال یہ ہے کہ میرے شوہر کا پانچ مہینے پہلے انتقال ہوگیا ہے، اور انہوں نے میرا حق مہر آج تک ادا نہیں کیا ہے، اور نہ ہی میں نے حق مہر معاف کیا ہے، تو کیا میں ان کی میراث سے حق مہر کے بقدر رقم لے سکتی ہوں؟

جواب: واضح رہے کہ بیوی کا مہر شوہر پر واجب ہوتا ہے، جو شوہر کے ذمہ قرض ہوتا ہے، اگر شوہر اپنی زندگی میں بیوی کا مہر ادا نہ کرے، اور نہ ہی بیوی حق مہر معاف کرے، تو شوہر کے انتقال کے بعد شوہر کی میراث میں سے بیوی کا حق مہر ادا کیا جائے گا۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

الھندیۃ: (303/1- 304، ط: دار الکتب العلمیة)

والمهر يتأكد بأحد معان ثلاثة: الدخول، والخلوة الصحيحة، وموت أحد الزوجين سواء كان مسمى أو مهر المثل حتى لا يسقط منه شيء بعد ذلك إلا بالإبراء

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 520 May 09, 2019
shouhor ki meeras mai say haq meher wusool karna, Receiving a dowry / meher from the husband's inheritance

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Nikah

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.