عنوان: نکاح سے پہلے قرآن خوانی کا حکم(3054-No)

سوال: کیا نکاح سے پہلے تمام رشتہ داروں کا اجتماعی طور پر کسی دن قرآن خوانی کے لئے جمع ہونا شرعا جائز ہے یا ایسا کرنا بدعت ہے؟

جواب: واضح رہے کہ شادی بیاہ سے پہلے قرآن خوانی اگر رسم و رواج، دکھلاوا، سنت یا دین کا لازمی جزء سمجھ کر کی جائے تو صحیح نہیں ہے، البتہ ان چیزوں سے احتیاط کرتے ہوئے اگر کبھی کبھار برکت حاصل کرنے کی نیت سے مل کر قرآن خوانی کر لی جائے تو درست ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

القرآن الکریم: (الاسراء، الآیۃ: 82)
وَنُنَزِّلُ مِنَ الْقُرْآنِ مَا هُوَ شِفَاءٌ وَرَحْمَةٌ لِّلْمُؤْمِنِينَ ۙ وَلَا يَزِيدُ الظَّالِمِينَ إِلَّا خَسَارًاo

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 1396 Dec 31, 2019
Nikah say pehlay Quran Khuwani ka Hukm, pehle, Khawani, Khawane, Nikah say pehlay Quran Parhna, Padhna, Ruling on reciting the Qur'an before marriage, congregational recitation of Quran, collective gathering for recitation of quran

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Bida'At & Customs

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.