عنوان: روزے کی حالت میں غسل واجب ہونے پر کیا کیا جائے؟(3105-No)

سوال: السلام علیکم، مفتی صاحب! اگر کسی روزے دار کو دن کے وقت میں غسل واجب ہو جائے، تو کیا اس سے روزہ ٹوٹ جائے گا؟ اگر نہیں تو وہ غسل کس طرح کرے گا؟ کلی میں غرغرہ کرے یا نہ کرے؟

جواب: واضح رہے کہ روزے کی حالت میں اگر احتلام ہو جائے، تو اس سے روزہ نہیں ٹوٹے گا، البتہ روزے کی حالت میں غسل کرتے وقت اس بات کا خیال رکھا جائے کہ پانی نہ تو حلق سے نیچے اترے، اور نہ دماغ تک پہنچے، اس لیے کلی میں غرغرہ کرنے اور ناک میں پانی اوپر تک چڑھانے سے گریز کرنا چاہیے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

مجمع الانھر: (360/1)
ولو اکل او شرب او جامع ناسیاً لا یفطر وکذا لونام فاحتلم

بدائع الصنائع: (112/1، ط: زکریا)
ومنہا: المبالغۃ في المضمضۃ والاستنشاق إلا في حال الصوم فیرفق؛ لأن المبالغۃ فیہما من باب التکمیل في التطہیر فکانت مسنونۃ إلا في حال الصوم لما فیہا من تعریض الصوم للفساد۔

الفتاویٰ التاتارخانیۃ: (رقم الحدیث: 377، 276/1، ط: زکریا)

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 540 Jan 03, 2020
Rozay ki haalat mein Ghusl wajib honay par kia kia jae?, Roze, halat, main, ghusul, ghusal, hone, per, peh, What to do once bathing (ghusl) becomes obligatory while fasting, should be done, ghusul, obligatory bathing

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Sawm (Fasting)

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.