عنوان: چاول کی متعین مقدار خیرات کرنے کی منت ماننے کا حکم (3379-No)

سوال: السلام علیکم، مفتی صاحب ! میں نے اور میری اہلیہ نے تین مختلف اوقات میں یہ منت مانی تھی کہ اگر ہمارا فلاں کام ہو گیا، تو گھر کی ایک خاص پتیلی میں چاول بنا کر صدقہ کریں گے۔ اب بفضل خدا ہمارا وہ کام ہو گیا ہے، پوچھنا یہ ہے کہ کیا ان تینوں منتوں کے چاول ملا کر ایک ساتھ پکا سکتے ہیں یا تین مختلف اوقات میں علیحدہ علیحدہ بنانا ضروری ہوگا؟

جواب: سوال میں ذکر کردہ صورت کے مطابق اگر میاں بیوی دونوں نے مل کر ایک ہی کام کے لیے منت مانی تھی، تو یہ منت منعقد ہوگئی ہے، لہذا اب جبکہ مطلوبہ کام خیریت سے ہو گیا ہے، تو اتنی مقدار میں چاول پکا کر خیرات کرنا لازم ہے، جتنی مقدار کو منت میں مقرر کیا تھا۔
نیز چونکہ آپ نے منت مانتے ہوئے جو الفاظ استعمال کیے ہیں، ان الفاظ میں تکرار کا معنی نہیں ہے، بلکہ اپنی مانی ہوئی منت کی تاکید ہے، لہذا مذکورہ صورت میں ایک مرتبہ ہی منت پوری کرنا ضروری ہوگا، تین مرتبہ لازم نہیں ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

الدر المختار: (735/3)
"( ومن نذر نذراً مطلقاً أو معلقاً بشرط وكان من جنسه واجب) أي فرض كما سيصرح به تبعاً ل ( البحر ) و ( الدرر ) ( وهو عبادة مقصودة ) خرج الوضوء وتكفين الميت (ووجد الشرط ) المعلق به (لزم الناذر)؛ لحديث: من نذر وسمى فعليه الوفاء بما سمى، (كصوم وصلاة وصدقة) ووقف (واعتكاف) وإعتاق رقبة وحج ولو ماشياً؛ فإنها عبادات مقصودة ومن جنسها واجب لوجوب العتق في الكفارة والمشي للحج على القادر من أهل مكة والقعدة الأخيرة في الصلاة وهي لبث كالأعتكاف ووقف مسجد للمسلمين واجب على الإمام من بيت المال وإلا فعلى المسلمين (ولم يلزم) الناذر (ما ليس من جنسه فرض كعيادة مريض وتشييع جنازة ودخول مسجد) ولو مسجد الرسول صلى الله عليه وسلم أو الأقصى لأنه ليس من جنسها فرض مقصود وهذا هو الضابط كما في الدرر".

والله تعالى أعلم بالصواب
دارالإفتاء الإخلاص،کرچی

Print Full Screen Views: 707
Chaawal ki mutayyan miqdaar khairat karnay ki mannat mannay ka hukm, hukam, Chawal, mutayan, miqdar, khairaat, karne, Ruling on giving alms on a certain amount of rice

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Ruling of Oath & Vows

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2022.