عنوان: قربانی کا جانور خود ذبح کرنا(3411-No)

سوال: مفتی صاحب! کیا قربانی کا جانور خود ذبح کرنا ضروری ہے یا کسی اور سے بھی ذبح کروایا جاسکتا ہے؟

جواب: واضح رہے کہ قربانی کا جانور اپنے ہاتھوں سے ذبح کرنا افضل ہے۔ اگر قربانی کرنے والاخود ذبح کرنا نہیں جانتا ہو تو کسی دوسرے شخص سے ذبح کروا نا چا ہیے، البتہ ذبح کے وقت وہاں خود موجود رہنا افضل ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

بدائع الصنائع: (کتاب التضحیة، 79/5، ط: دارالکتب العلمیة)
فالافضل ان یذبح بنفسہ ان قدر علیہ ۔۔۔۔۔۔۔ھذا ان کان الرجل یحسن الذبح ویقدر علیہ، فاما اذا لم یحسن فتولیتہ غیرہ فیہ اولی۔۔۔۔۔۔ویستحب ان یحضر۔

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 721 Jan 23, 2020
Qurbani ka janwar khud zabah karna afzal hay, It is better to slaughter the sacrificial animal yourself, It is preffered, It is liked, It is more preferred

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Qurbani & Aqeeqa

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.