عنوان: داڑھی کٹانے والے کے پیچھے نماز تراویح کا حکم (104237-No)

سوال: السلام عليكم، مفتی صاحب ! موجودہ حالات میں گھر میں تراویح کی نماز پڑھوانی ہو تو داڑھی منڈوانے والے حافظ اور داڑھی نہ منڈوانے والے باریش غیر حافظ (جو صرف ناظرہ قرآن پڑھا ہوا ہو) میں سے کسے امام بنانا چاہیے؟

جواب: داڑھی منڈانے والے حافظ کی اقتداء میں تراویح یا فرض نماز پڑھنا مکروہ تحریمی ہے، لہذا اگر باشرع متبع شریعت حافظ میسر نہ ہو، تو متبع شریعت غیرحافظ کی اقتداء میں چھوٹی سورتوں سے تراویح پڑھنی چاہیے۔

دلائل:

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔


لما فی الشامیۃ:
"وأما الفاسق فقد عللوا کراہۃ تقدیمہ بأنہ لا یہتم لأمر دینہ، وبأن في تقدیمہ للإمامۃ تعظیمہ -إلی- بل مشی في شرح المنیۃ علی أن کراہۃ تقدیم کراہۃ تحریم؛ لما ذکرنا".
(الدر المختار مع الشامي، کتاب الصلاۃ، باب الإمامۃ، ط: کراچی ۱/ ۵۶۰)

وفی الطحطاوی علی مراقی الفلاح:
"کون الکراہۃ في الفاسق تحریمیۃ".
(الطحطاوي علی المراقي، الصلاۃ، فصل في بیان الأحق بالإمامۃ)

واﷲ تعالیٰ اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی
Print Full Screen Views: 335
dhaari / beard katanay wale peechay namaz e taraweeh ka hukum

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Taraweeh Prayers

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2022.