عنوان: کیا محض مشروبات پلانے سے ولیمہ کی سنت ادا ہوجائے گی؟ (4863-No)

سوال: آج کل بعض لوگوں میں رواج ہے کہ ولیمہ کے موقع پر صرف مشروبات پلا دیتے ہیں، تو کیا محض مشروبات پلانے سے ولیمہ کی سنت ادا ہوجائے گی؟

جواب: ولیمہ اس کھانے کو کہتے ہیں، جو رخصتی کے بعد لڑکے یا اس کے اولیاء کی طرف سے کھلایا جائے، لہذا ولیمہ میں محض مشروبات پلانا رسم ہے، اس سے ولیمہ کی سنت ادا نہیں ہوگی۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

الموسوعۃ الفقہیۃ الکویتیۃ: (232/45، ط: دار السلاسل)

الوليمة في اللغة مشتقة من الولم وهو الجمع، لأن الزوجين يجتمعان، وهي اسم لطعام العرس والإملاك، وقيل: هي كل طعام صنع لعرس وغيره أو كل طعام يتخذ لجمع. (١) وفي الاصطلاح تقع الوليمة على كل طعام يتخذ لسرور حادث من عرس وإملاك وغيرهما، لكن استعمالها مطلقة في العرس أشهر وفي غيره بقيد.

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 487 Jul 23, 2020
kia mehez mashroobat pilanay say valima ki sunnnat ada hojaigi?, Will the Sunnah of Walima be fulfilled / counted by just drinking?

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Nikah

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.