عنوان: جمعہ کے دن پیدائش ہونے کی صورت میں عقیقہ کب کیا جائے؟(100495-No)

سوال: اگر بچے کی پیدائش جمعہ کو ہوئی ہو، تو عقیقہ کب کیا جائے گا، جمعرات یا جمعہ؟

جواب: اگر بچے کی پیدائش جمعہ کے دن مغرب کے بعد ہوئی ہو تو جمعہ کے دن عقیقہ ہوگا اور اگر جمعہ کے دن میں پیدائش ہوئی ہو، تو جمعرات کے دن ہوگا۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

سنن النسائی: (کتاب العقیقة، کم یعق عن الجاریۃ، 187/3، ط: دار المعرفة)
عن سمرة بن جندب، عن رسول اللہ صلی الله علیہ وسلم قال: ”کل غلام رھینٴ بعقیقتہ تذبح عنہ یوم السابعة، ویحلق رأسہ ویسمّیٰ“․

مصنف عبد الرزاق: (332/4، ط: المکتب الاسلامی)
عن ابن عيينة قال: سمعت عطاء يقول: «يعق عنه يوم سابعه، فإن أخطأهم، فأحب إلي أن يؤخروه إلى السابع الآخر» قال: «ورأيت الناس يتحرون بالعق عنه يوم سابعه»

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 197
Juma'ay kay din Paidaish honay ki soorat mein Aqiqah kab kia jae, Jummah, Juma, Jumme, paida hona, Aqeeqah kab kia jae, kab rakkha jae, Aqeeqa, When to do aqeeqah in case of birth on Friday, What day should Aqiqah be done, Aqeqah, Where does aqiqah take place, By what time is Aqiqah compulsory, Animal sacrifice, Can aqeeqah be done before 7 days, What does aqeeqah means

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Qurbani & Aqeeqa

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2022.