عنوان: نکاح اور شادی کے اخراجات کے لیے لڑکی والوں کا لڑکے والوں سے رقم طلب کرنا (4954-No)

سوال: مفتی صاحب! سوال یہ ہے کہ اگر کوئی لڑکی والے نکاح اور شادی بیاہ کے اخراجات کے لیے لڑکے والوں سے رقم طلب کرتے ہیں، تو یہ رقم طلب کرنا کیسا ہے؟

جواب: واضح رہے کہ لڑکے کے ذمہ بیوی کو صرف مہر ادا کرنا واجب ہے، اس کے علاوہ رقم دینا لڑکے کے ذمہ واجب نہیں ہے، تاہم اگر لڑکی والے نکاح اور شادی بیاہ کے اخراجات کے لیے لڑکے والوں سے رقم طلب کریں، اور لڑکے والے اپنی خوشی سے تعاون کے طور پر کچھ رقم دے دیں، تو اس میں کوئی حرج نہیں ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

التفسیر المظہری: (11/2، ط: مکتبة الرشدیة)

ولما كان الصداق عطية من الله تعالى على النساء صارت فريضة وحقا لهن على الأزواج۔۔۔الخ

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 764 Jul 28, 2020
nikkah or shadi kay ikhrajat kay liye larki ka larky walon say raqam talab karna, Girl's family asking money from boy family for marriage and wedding expenses

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Nikah

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.