عنوان: مسجد میں پانی ختم ہوجائے(104998-No)

سوال: مفتی صاحب! اگر مسجد میں وضو کے لیے پانی نہ ہو، تو کیا معتکف کے لئے پانی لینے کے لیے باہر جانا یا اپنے گھر جانا جائز ہے یا نہیں؟

جواب: مسجد میں وضو کا پانی ختم ہوگیا، تو جہاں سے جلدی لا سکتا ہو، وہاں جا کر پانی لا سکتا ہے، اور اگر گھر جانا پڑے، تو گھر بھی جانا جائز ہے، خواہ وہیں وضو کر کے آجائے یا مسجد میں آکر وضو خانے پر بیٹھ کر وضو کر لے، درمیان میں کہیں بلا ضرورت نہ ٹھہرے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

کذا فی البحر الرائق:

ولایخرج منہ الا لحاجۃ شرعیۃ کالجمعۃ او طبیعیۃ کالبول والغائط ولا یمکث بعد فراغہ من الطہور لان ماثبت بالضرورۃ یتقدربقدرہا۔

(البحر الرائق، 301/2، ط سعید)

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی
Print Views: 161

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Aitikaf

Copyright © AlIkhalsonline 2021. All right reserved.

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com