عنوان: شوہر کی اجازت کے بغیر جہیز کا سامان فروخت کرنے کا حکم(7019-No)

سوال: مفتی صاحب! عورت شوہر کی اجازت کے بغیر اپنے جہیز کا سامان فروخت کر سکتی ہے؟

جواب: واضح رہے کہ شادی کے موقع پر ماں باپ کی طرف سے جو جہیز کا سامان لڑکی کو دیا جاتا ہے، وہ لڑکی کی ملکیت ہوتا ہے، اس لئے لڑکی اپنی ملکیت کی چیزوں میں اپنی مرضی کے مطابق تصرف کر سکتی ہے، لہٰذا لڑکی کا جہیز کا سامان شوہر کی اجازت کے بغیر فروخت کرنا جائز ہے، البتہ اخلاقا اور مروتا شوہر کا دل جیتنے اور گھر میں محبت اور الفت کا ماحول قائم رکھنے کے لئے شوہر سے اجازت لے لینا بہتر ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

رد المحتار: (مطلب فیما لو زفت إلیہ بلا جھاز، 585/3، ط: سعید)
فإن کل أحد یعلم أن الجھاز ملک المرأۃ، وأنہ إذا طلقھا تأخذہ کلّہ ،وإذا ماتت یورث عنھا.

واللہ تعالی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 739 Mar 06, 2021
shouhar ki ijazat kay bagair jahaiz farookht karne ka hukum, Order to sell dowry goods without husband's permission

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Nikah

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.