عنوان: روزے کی حالت میں اگر غلطی سے کچھ کھا پی لیا تو روزہ ٹوٹ جائے گا(7185-No)

سوال: کیا روزے کی حالت میں اگر غلطی سے کچھ کھا یا پی لے تو اس سے روزی ٹوٹ جائیگا یا نہیں؟

جواب: اگر کسی شخص کو یاد ہو کہ وہ روزے سے ہے، اور غلطی سے کوئی کھانے پینے کی چیز اس کے حلق سے اتر جائے تو اسکا روزہ ٹوٹ جائے گا، اس پر اس روزے کی قضاء لازم ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

الھدایہ: (234/1، ط: مکتبہ رحمانیہ)
إذا اکل الصائم او شرب او جامع ناسیا، لم یفطر، و لو کان مخطئا، او مکرھا، فعلیہ القضاء۔

الدر المختار مع رد المحتار: (401/2، ط: دار الفکر)
(وإن أفطر خطأ) كأن تمضمض فسبقه الماء أو شرب نائما أو تسحر أو جامع على ظن عدم الفجر۔۔۔الخ
(قوله: وإن أفطر خطأ) شرط جوابه قوله الآتي قضى فقط وهذا شروع في القسم الثاني وهو ما يوجب القضاء دون الكفارة بعد فراغه مما لا يوجب شيئا والمراد بالمخطئ من فسد صومه بفعله المقصود دون قصد الفساد نهر عن الفتح

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 786 Mar 29, 2021
rozay ki halat mai agar galti say kuch kha pi liya to roza toot jayga, If someone mistakenly eat or drink something while fasting, the fast will be broken

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Sawm (Fasting)

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.