عنوان: کیا دو دن آنے والا خون حیض (ماہواری) کا خون شمار ہوگا؟(107821-No)

سوال: مجھے بلوغت کے بعد صرف دو دن خون آیا ہے، تو اس کا کیا حکم ہے، کیا یہ دو دن آنے والا خون حیض (ماہواری) کا خون شمار ہوگا، وضاحت فرمادیں؟

جواب: حیض کی کم سے کم مدت تین دن ہے، اس سے کم آنے والا خون حیض شمار نہیں ہوتا۔

صورتِ مسئولہ میں آپ کا دو دن آنے والا خون حیض شمار نہیں ہوگا، لہذا آپ بدستور پاک ہیں اور آپ پر پاکی والے احکام جاری ہوں گے۔

دلائل:

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔


کما فی الشامیۃ:

الأولی ان تبلغ بالسن وتبقی بلا دم طول عمرھا فتصوم وتصلی ویاتیھا زوجھا وغیر ذلک ابداً…الثانیۃ ان تری الدم عند البلوغ او بعدہ أقل من ثلاثۃ ایام ثم یستمر انقطاعہ وحکمھا کالأولی۔

(ج: 1، ص: 285، ط: دار الفکر)

وفی الھندیۃ:

(ومنها) النصاب أقل الحيض ثلاثة أيام وثلاث ليال في ظاهر الرواية. هكذا في التبيين وأكثره عشرة أيام ولياليها. كذا في الخلاصة.

(ج: 1، ص: 36، ط: دار الفکر)

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی
Print Full Screen Views: 262
kia do din aanay wala khoon haiz ka khoon shumaar hoga?

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Women's Issues

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2022.