عنوان: بیوی کو اپنا عضو تناسل پکڑوانا اور بیوی کی شرمگاہ چھونا اور مسلنا(7937-No)

سوال: مفتی صاحب ! شوہر کا اپنا عضو تناسل بیوی کے ہاتھ میں پکڑواکر مسلوانا یا شوہر کا بیوی کی شرمگاہ کو مسلنا جائز ہے یا نہیں؟

جواب: شوہر کا اپنا عضو تناسل بیوی کو پکڑوانا یا بیوی کے ہاتھ سے اپنا عضو تناسل مسلوانا، اسی طرح بیوی کی شرمگاہ کو چھونا یا مسلنا بلا کراہت جائز ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

الفتاوی الھندیۃ: (کتاب الکراہیۃ، 328/5، ط: دار الفکر)
قال أبو يوسف - رحمه الله تعالى -: سألت أبا حنيفة - رحمه الله تعالى - عن رجل يمس فرج امرأته وهي تمس فرجه لتحرك آلته هل ترى بذلك بأسا؟ قال: لا وأرجو أن يعطى الأجر، كذا في الخلاصة.

فتاویٰ عثمانی: (405/4، ط: مکتبہ معارف القرآن)

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 2662 Jul 06, 2021
biwi ko apna uzwe tanasul pakarwana or biwi ki sharam gaah choona or masalana, Husband Holding his penis into his wife and wife touching and massaging his private parts

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Nikah

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.