عنوان: غیر مسلم عورت کے ساتھ زنا ہوجائے، تو کیا مسلمان غسل کرنے سے بھی پاک نہیں ہوگا؟(108223-No)

سوال: مفتی صاحب ! ہمارے یہاں ایک بات مشہور ہے کہ اگر کوئی مسلمان آدمی کسی غیر مسلم عورت سے زنا کرے تو وہ غسل کرنے سے بھی پاک نہیں ہوگا اور بعض لوگ کہتے ہیں کہ جب تک کوئی اینٹ نہیں پگلائے گا، اس وقت تک اس کا غسل اعتبار سے درست نہیں ہوگا۔ کیا قران وسنت میں اس کی کوئی اصل ہے یا ایسی ہی من گھڑت بات ہے؟

جواب: واضح رہے کہ زنا حرام اور کبیرہ گناہ ہے، چاہے مسلم عورت کے ساتھ کیا جائے یا غیر مسلم عورت کے ساتھ، اس پر صدق دل سے توبہ و استغفار کرنا اور آئندہ اس قبیح فعل سے اجتناب کرنا شرعاََ لازم ہے۔

البتہ اگر یہ قبیح فعل کسی مسلمان سے سرزد ہوجائے، چاہے مسلم عورت کے ساتھ یا غیر مسلم عورت کے ساتھ، ہر صورت میں ایک مرتبہ شرعی غسل کرنے سے جنابت کی ناپاکی دور ہو جائے گی، لہذا صورت مسئولہ میں لوگوں کی مذکورہ بات کہ "ایسا شخص غسل کرنے سے بھی پاک نہیں ہوگا" یا "پاک ہونے کے لئے اینٹ پگھلانا ضروری ہے"، درست نہیں ہے۔

دلائل:

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔


القرآن الکریم:(سورۃالمائدۃ،الایۃ:6)
وَإِنْ كُنْتُمْ جُنُبًا فَاطَّهَّرُوا...الخ

المحيط البرهاني:(82/1،ط:دارالکتب العلمیۃ)
أسباب الغسل ثلاثة: الجنابة، والحيض، والنفاس۔۔۔۔۔۔الجنابة تثبت بشيئين:
أحدهما: انفصال المني عن شهوة، والثاني: الإيلاج في الآدمي۔

بدائع الصنائع:(136/1،ط:مكتبہ رشيديہ،كوئٹہ)
(وأما) الغسل المفروض فثلاثة: الغسل من الجنابة، والحيض، والنفاس....(أما) الأول فالجنابة تثبت بأمور بعضها مجمع عليه، وبعضها مختلف فيه (أما) المجمع عليه فنوعان أحدهما خروج المني عن شهوة دفقا من غير إيلاج بأي سبب حصل الخروج كاللمس، والنظر، والاحتلام، حتى يجب الغسل بالإجماع لقوله - صلى الله عليه وسلم - «الماء من الماء» ، أي: الاغتسال من المني،...والثاني إيلاج الفرج في الفرج في السبيل المعتاد سواء أنزل، أو لم ينزل.

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی
Print Full Screen Views: 298
ghair muslim aourat kay sath zina hojaye to kia musalman ghusal karne say bhi pak nahi hoga?

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Purity & Impurity

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2022.