عنوان: ساس کا اپنا زیور بہو کو بطورِ مہر دینا(9323-No)

سوال:
السلام، مفتی صاحب! وہ زیور جو میری ملکیت ہو، مگر میں اپنے بیٹے کی طرف سے اسکی بیوی کو حق مہر کی صورت میں دلوانا چاہتی ہوں، کیا ہم ایسا کرسکتے ہیں؟ براہ کرم راہنمائی فرمادیں۔

جواب: جی ہاں ! آپ اپنا زیور بیٹے کی طرف سے بطورِ مہر بہو کو دے سکتی ہیں۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

شرح المجلۃ لسلیم رستم باز: (المادۃ: 1192، 230/1، ط: نور محمد)

كُلٌّ يَتَصَرَّفُ فِي مِلْكِهِ كَيْفَمَا شَاءَ

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 238
saas ka pana zewar baho ko bator e meher dena

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Nikah

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2022.