عنوان: نند کو زکوۃ دینا(10298-No)

سوال: میری نند کا کوئی ذریعہ آمدنی نہیں ہے اور وہ صاحب نصاب بھی نہیں ہے، اس کی ایک بیٹی ہے، جس کی شادی ہو چکی ہے تو کیا میں اپنی نند کو ہر مہینے زکوۃ کی مد میں سے کچھ رقم دے سکتی ہوں؟

جواب: اگر آپ کی نند مستحقِ زکوۃ ہوں تو آپ اپنی نند کو زکوٰۃ دے سکتی ہیں۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

بدائع الصنائع: (50/2، ط: سعید)

"ویجوز دفع الزکاۃ إلی من سوی الوالدین والمولودین من الأقارب ومن الإخوۃ والأخوات وغیرہم لانقطاع منافع الأملاک بینہم".

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 266 Feb 27, 2023
nand ko zakat dena

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Zakat-o-Sadqat

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.