عنوان: سیدہ والدہ کی غیر سید اولاد کو زکوة دینا (10780-No)

سوال: السلام علیکم، اگر باپ غیر سید ہو اور ماں سید ہو تو اگر اولاد ضرورت مند غیر صاحب نصاب ہو تو کیا اس اولاد کو زکوٰۃ دی جاسکتی ہے؟

جواب: سیدہ خاتون جو غیر سید شخص کے نکاح میں ہو، اس کی اولاد اگر مستحق زکوة ہو تو ان کو زکوۃ دینا جائز ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

رد المحتار: (87/3، ط: دار الفکر)

"ويؤخذ من هذا أن من كانت أمها علوية مثلا وأبوها عجمي يكون العجمي كفؤا لها، وإن كان لها شرف ما لأن النسب للآباء ولهذا جاز دفع الزكاة إليها فلا يعتبر التفاوت بينهما من جهة شرف الأم ولم أر من صرح بهذا والله أعلم.

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 191 Jul 26, 2023
sayeda / sayyeda / sayedah walida / maa ki ghair sayed / sayyed olad / oulad / bacho ko zakat dena

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Zakat-o-Sadqat

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.