عنوان: اگر کسی کے ساتھ خواتین ہوں تو اس کو سلام کرنے کا حکم(12309-No)

سوال: آج کل کے معاشرے میں عام طور پر جو دوست احباب ایک دوسرے کو سلام کرتے ہیں، اگر راستے میں ان کے ہمراہ کوئی عورت ہو تو نہ تو کسی کو سلام کرتے ہیں، نہ ہی یہ چاہتے ہیں کہ کوئی اس کو سلام کرے، بلکہ نگاہیں نیچے کرکے سلام کے بغیر گزر جاتے ہیں، اسلام میں اس کی کیا حیثیت ہے، اس لیے کہ اس میں تو فتنے کا بھی اندیشہ نہیں، نہ ہی یہ سلام عورت کو کیا جاتا ہے؟

جواب: اگر کسی مرد کے ساتھ خواتین ہوں تو اس کو سلام کرنے میں کوئی حرج نہیں ہے، اس صورت میں بھی سلام کی سنت ادا کرنی چاہیے، البتہ کسی مرد کا اجنبی عورت کو اور عورت کا اجنبی مرد کو سلام کرنا پسندیدہ نہیں ہے۔
باقی جہاں تک لوگوں کے معمول کا تعلق ہے، ہوسکتا ہے کہ اس کی وجہ یہ ہو کہ لوگ فطری حیاء اور شرم کی وجہ سے جلدی سے گزر جانے کے لیے ایسا کرتے ہوں، اور سلام اس لیے نہ کرتے ہوں کہ سلام اور کلام کے لیے رُکنا پڑے گا، اور خواتین کو بھی ساتھ رکنا پڑے گا، اگر سلام نہ کرنے کی یہ وجہ ہو تو اس صورت میں سلام نہ کرنے میں کوئی گناہ نہیں ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

صحيح البخاري: (رقم الحديث: 2035، ط: دار طوق النجاة)
حدثنا ‌أبو اليمان: أخبرنا ‌شعيب، عن ‌الزهري قال: أخبرني ‌علي بن الحسين رضي الله عنهما: أن ‌‌صفية زوج النبي صلى الله عليه وسلم أخبرته: «أنها جاءت إلى رسول الله صلى الله عليه وسلم تزوره في اعتكافه في المسجد، في العشر الأواخر من رمضان فتحدثت عنده ساعة، ثم قامت تنقلب، فقام النبي صلى الله عليه وسلم معها يقلبها، حتى إذا بلغت باب المسجد عند باب أم سلمة، مر رجلان من الأنصار، فسلما على رسول الله صلى الله عليه وسلم، فقال لهما النبي صلى الله عليه وسلم: على رسلكما، إنما هي ‌صفية بنت ‌حيي، فقالا: سبحان الله يا رسول الله، وكبر عليهما، فقال النبي صلى الله عليه وسلم: إن الشيطان يبلغ من الإنسان مبلغ الدم، وإني خشيت أن يقذف في قلوبكما شيئا.

الدر المختار: (369/6)
وفي الشرنبلالية معزيا للجوهرة: ولا يكلم الأجنبية إلا عجوزا عطست أو سلمت فيشمتها لا يرد السلام عليها وإلا لا انتهى، وبه بان أن لفظه لا في نقل القهستاني، ويكلمها بما لا يحتاج إليه زائدة فتنبه.

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 240 Nov 13, 2023
agar kisi k sath khwateen ho too us ko salam karne ka hukum

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Characters & Morals

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.