عنوان: ناک کے اوپر دونوں ابرؤوں کے درمیان کے بال کاٹنا (15833-No)

سوال: مفتی صاحب! کیا ناک کے اوپر آپس میں جڑے ہوئے بھنووں کے بال صاف کرنا جائز ہے؟

جواب: واضح رہے کہ محض زیب و زینت کی غرض سے یا فیشن کے لیے ناک کے اوپر دونوں ابرؤوں کے درمیان کے بال کاٹنا جائز نہیں ہے، البتہ اگر بال حد سے زیادہ بڑھ جائیں اور دیکھنے میں بدنما معلوم ہوں تو انہیں عام حالت کے مطابق بنانے کی گنجائش ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

سنن الترمذی: (رقم الحدیث: 360، ط: دار الغرب الاسلامی)
عن علقمة، عن عبد الله، ان النبي صلى الله عليه وسلم: " لعن الواشمات والمستوشمات، والمتنمصات، مبتغيات للحسن مغيرات خلق الله "، قال: هذا حديث حسن صحيح۔

الدر المختار: (407/6، ط: سعید)
” قطعت شعر راسھا ،اثمت ولعنت۔۔۔۔وان باذن الزوج ۔”

رد المحتار: (313/6، ط: سعید)
لا باس باخذ الحاجبین وشعر وجھه ،مالم یشبه المخنث ۔

واللّٰه تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 440 Apr 19, 2024
nak naak ke oper dono aabrowo abrowon ke darmian darmiyan ke bal katna

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Women's Issues

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.