عنوان: عدت ختم ہونے پر کسی محرم کے گھر جانا(101824-No)

سوال: السلام علیکم، مفتی صاحب ! جب عورت کی عدت پُوری ہو جائےتو ضروری ہے کہ وہ اپنے کسی محرم کے گھر جائے، اس دن ؟ یا اپنے گھر میں رہے ؟ جواب جتنا جلد ملے، بہتر ہے کیوں کہ کل عدت پُوری ہونے کا دن ہے۔

جواب: عدت والی عورت کا عدت ختم ہونے پر اپنے کسی محرم کے گھر جانا ضروری نہیں ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

لما فی القرآن الکریم:

"والذین یتوفون منکم و یذرون ازواجا یتربصن بانفسھن أربعۃ أشھر و عشرا "۔

(البقرۃ: ۲۳۴)

وفیہ ایضاً:

وَ الۡمُطَلَّقٰتُ یَتَرَبَّصۡنَ بِاَنۡفُسِہِنَّ ثَلٰثَۃَ قُرُوۡٓءٍ ؕ۔۔۔الایۃ

(سورۃ البقرۃ، آیت: 228)

وفیہ ایضاً:

وَ الّٰٓـِٔىۡ یَئِسۡنَ مِنَ الۡمَحِیۡضِ مِنۡ نِّسَآئِکُمۡ اِنِ ارۡتَبۡتُمۡ فَعِدَّتُہُنَّ ثَلٰثَۃُ اَشۡہُرٍ ۙ وَّ الّٰٓـِٔىۡ لَمۡ یَحِضۡنَ ؕ وَ اُولَاتُ الۡاَحۡمَالِ اَجَلُہُنَّ اَنۡ یَّضَعۡنَ حَمۡلَہُنَّ ؕ وَ مَنۡ یَّتَّقِ اللّٰہَ یَجۡعَلۡ لَّہٗ مِنۡ اَمۡرِہٖ یُسۡرًا

(سورۃ الطلاق، آیت: 4)

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی
Print Full Screen Views: 329

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Iddat(Period of Waiting)

Copyright © AlIkhalsonline 2021. All right reserved.

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com