عنوان: بوڑھی چچی کا اپنے بھتیجے کے ساتھ عمرہ پر جانا   (101959-No)

سوال: السلام علیکم، مفتی صاحب ! ایک مسئلہ میں رہنمائی درکار ہے۔ ایک شخص اپنے والدین اور پھوپھی کے ساتھ اپنی چچی کو جنہوں نے پہلے بھی عمرہ کیا ہے، اپنے ساتھ عمرہ پر لے جانا چاہتا ہے، چچی کی عمر 75 سال ہے، کیا اس شخص کے لیے ایسا کرنے کی گنجائش ہے؟

جواب: عورت کے لیے محرم کے بغیر شرعی سفر کرنا ناجائز ہے،خواہ عورت جوان ہو یا بوڑھی، اور چچی کے لیے بھتیجا غیر محرم ہے۔
لہذا صورت مسئولہ میں عورت کا بغیر محرم کے عمرہ کے سفر کے لیے جانا جائز نہیں ہے۔

مسلم شریف کی روایت میں ہے:
عن عبد الله بن عمر عن النبي صلى الله عليه وسلم، قال: «لا يحل لامرأة تؤمن بالله واليوم الآخر، تسافر مسيرة ثلاث ليال، إلا ومعها ذو محرم»'. 
(صحيح مسلم(2/ 975)

ترجمہ: جو عورت   ﷲ اور قیامت کے دن پر یقین رکھتی ہو  اس کے لیے حلال نہیں ہے کہ وہ محرم کے بغیر تین رات کا (اڑتالیس میل یا 77.24 کلو میٹر) سفر کرے ۔

عمرہ میں مزید فتاوی

24 Aug 2019
ہفتہ 24 اگست - 22 ذو الحجة 1440

Copyright © AlIkhalsonline 2019. All right reserved.

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com