عنوان: غیر عالم شخص کا قرآن کریم کی تفسیر بیان کرنا(102157-No)

سوال: مفتی صاحب ! کیا کوئی عام شخص قرآن کا ترجمہ اور تفسیر پڑھ کر دوسروں کو تعلیم دے سکتا ہے جب کے وہ عالم دین بھی نہ ہو؟

جواب: قرآن کریم کا ترجمہ وتفسیر بیان کرنا بہت ذمہ داری والا کام ہے، اس کے لیے دینی علوم میں اعلی درجہ کی مہارت درکار ہے، جو کہ غیر عالم میں موجود نہیں ہوتی۔
تاہم اگر کسی جگہ قرآن کریم کا ترجمہ و تفسیر بیان کرنے والا کوئی عالم دین میسر نہ ہو، تو ایسی صورت میں کسی مستند تفسیر کو لے کر سامعین کو، اس کا حرف حرف پڑھ کر سنایا جائے، اپنی طرف سے اس میں کوئی تشریح نہ کی جائے، جہاں کوئی بات سمجھ نہ آئے تو مستند علماء کرام سے رابطہ کرکے ان سے دریافت کر لیا جائے۔
اس سلسلے میں اردو زبان میں قرآن کریم کی دو تفسیروں کو پڑھنا مفید رہے گا۔
۱- آسان ترجمہ قرآن (از مفتی محمد تقی عثمانی صاحب زید مجدھم)
یہ ان لوگوں کے لیے ہے جن کے پاس فرصت کم ہو۔

۲- تفسیر معارف القرآن (مفتی محمد شفیع عثمانی صاحب نور اللہ مرقدہ)
یہ ان لوگوں کے لیے ہے جن کے پاس فرصت زیادہ ہو۔

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی
Print Views: 351

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Interpretation of Quranic Ayaat

Copyright © AlIkhalsonline 2021. All right reserved.

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com