عنوان: امام شافعی رحمہ اللہ کی طرف منسوب ایک واقعے کی تحقیق(100301-No)

سوال: امام شافعی رحمتہ اللہ علیہ کی طرف یہ واقعہ منسوب ہے کہ بنو امیہ کے زمانے میں ایک سونے کا بکسہ ملا، اس کے اندر ایک پرچہ لکھا ہوا تھا اور اس میں یہ دعا لکھی ہوئی تھی، جو اس دعا کو پڑھے گا اسے ہر قسم کی بیماری سے شفا ملے گی۔ کیا یہ واقعہ درست ہے؟ برائے کرم اس کی تصدیق فرمادیں. "بِسْمِ اللهِ الرَّحْمنِ الرَّحِيمِ بِسْمِ اللهِ وَبِاللهِ وَلَا حَوْلَ وَلَا قُوَّةَ اِلَّا بِاللهِ الْعَلِيِّ الْعَظِيْمِ اُسْكُن اَيُّهَا الْوَجْعُ سكنتك بِالَّذِي يُمْسِكُ السَّمَاءَ اَنْ تَقَعَ عَلَى الْاَرْضِ اِلَّا بِإِذْنِه اِنَّ اللهَ بِالنَّاسِ لَرَؤُوْفٌ رَّحِيم. بِسْمِ اللهِ الرَّحْمنِ الرَّحِيمِ بِسْمِ اللهِ وَبِاللهِ وَلَا حَوْلَ وَلَا قُوَّةَ اِلَّا بِاللهِ الْعَلِيِّ الْعَظِيْمِ اُسْكُنْ اَيُّهَا الْوَجْعُ سكنتك بِالَّذِي يُمْسِكُ السَّمَاوَاتِ وَالْاَرْضَ اَنْ تَزُوْلَا وَلَئِنْ زَالَتَا اِنْ اَمْسَكَهُمَا مِنْ اَحَدٍ مِّنْ بَعْدِهِ اِنَّهُ كَانَ حَلِيْمًا غَفُوْرًا". قال الامام الشافعي رحمه اللہ: فما احتجت معه الى طبيب قط بإذن الله تعالى فإنه هو الشافي.

جواب: یہ ایک تاریخی واقعہ ہے، جس کا تذکرہ تاریخ کی کتابوں میں ملتا ہے، اگرچہ بعض کتب میں اس واقعے کو نقل کرنے والے دوسرے شخص ہیں، لیکن إمام شافعی کی نسبت سے بھی یہ واقعہ منقول ہے۔
وأخرج من طريق عبيدالله بن محمد بن حفص العيشي، سمعت أبي يقول: لما قبض ولد العباس خزائن بني أمية، وجدوا سفطا مختوما ففتحوه، فاذا فيه رقّ مكتوب عليه:
«شفاء باذن الله» ففتح فاذا هو: «بِسْمِ اللهِ وَبِاللهِ وَلَا حَوْلَ وَلَا قُوَّةَ اِلَّا بِاللهِ الْعَلِيِّ الْعَظِيْمِ اُسْكُن اَيُّهَا الْوَجْعُ سكنت بِالَّذِي يُمْسِكُ السَّمَاءَ اَنْ تَقَعَ عَلَى الْاَرْضِ اِلَّا بِإِذْنِه اِنَّ اللهَ بِالنَّاسِ لَرَؤُوْفٌ رَّحِيم، بِسْمِ اللهِ وَبِاللهِ وَلَا حَوْلَ وَلَا قُوَّةَ اِلَّا بِاللهِ الْعَلِيِّ الْعَظِيْمِ اُسْكُن اَيُّهَا الْوَجْعُ سكنت بِالَّذِي سَكَنَ لَهُ مَا فِي اللَّيْلِ وَالنَّهَارِ، وَهُوَ السَّمِيْعُ الْعَلِيْمُ، بِسْمِ اللهِ وَبِاللهِ وَلَا حَوْلَ وَلَا قُوَّةَ اِلَّا بِاللهِ الْعَلِيِّ الْعَظِيْمِ اُسْكُن اَيُّهَا الْوَجْعُ سكنت بِالَّذِي إنْ يَّشَاْ يُسْكِنِ الرِّيَاحَ فَيَظْلَلْنَ رَوَاكِدَ عَلَى ظَهْرِهِ، إِنَّ فِي ذَلِكَ لَآيَاتٍ لِّكُلِّ صَبَّارٍ شَكُوْر، بِسْمِ اللهِ وَبِاللهِ وَلَا حَوْلَ وَلَا قُوَّةَ اِلَّا بِاللهِ الْعَلِيِّ الْعَظِيْمِ اُسْكُنْ اَيُّهَا الْوَجْعُ سكنت بِالَّذِي يُمْسِكُ السَّمَاوَاتِ وَالْاَرْضَ اَنْ تَزُوْلَا وَلَئِنْ زَالَتَا اِنْ اَمْسَكَهُمَا مِنْ اَحَدٍ مِّنْ بَعْدِهِ اِنَّهُ كَانَ حَلِيْمًا غَفُوْرًا
اس واقعے کے راوی عبیداللہ کہتے ہیں کہ اس دعا کے ملنے کے بعد ہمیں کسی علاج اور دوا کی ضرورت باقی نہ رہی۔

قال عبيدالله: قال أبي: فما احتجت بعده إلى علاج، ولا دواء.
اسی طرح عبیداللہ کہتے ہیں کہ مجھے میرے والد نے بتایا کہ یہ بنوأمیّہ کو حضرت حسین رضی اللہ عنہ کے سامان سے ملا تھا۔

وقال لنا أبي: إن بني أمية أصابوه في ثقل الحسين رضی اللہ عنه۔
( ذیل تاریخ بغداد:2/173 و تاریخ اربل :ص499ط،دارالکتب العلمیہ بیروت۔)
یہی واقعہ امام شافعی رحمه اللہ کی طرف بھی منسوب کیا جاتا ہے۔
روى الامام الشافعي رحمه الله انه قال: وجد في بعض دور بني أمية درج من فضة وعليه قفل من ذهب مكتوب على ظهره شفاء من كل داء وفي داخله مكتوب هذه الكلمات:
"بِسْمِ اللهِ الرَّحْمنِ الرَّحِيمِ بِسْمِ اللهِ وَبِاللهِ وَلَا حَوْلَ وَلَا قُوَّةَ اِلَّا بِاللهِ الْعَلِيِّ الْعَظِيْمِ اُسْكُن اَيُّهَا الْوَجْعُ سكنتك بِالَّذِي يُمْسِكُ السَّمَاءَ اَنْ تَقَعَ عَلَى الْاَرْضِ اِلَّا بِإِذْنِه اِنَّ اللهَ بِالنَّاسِ لَرَؤُوْفٌ رَّحِيم. بِسْمِ اللهِ الرَّحْمنِ الرَّحِيمِ بِسْمِ اللهِ وَبِاللهِ وَلَا حَوْلَ وَلَا قُوَّةَ اِلَّا بِاللهِ الْعَلِيِّ الْعَظِيْمِ اُسْكُنْ اَيُّهَا الْوَجْعُ سكنتك بِالَّذِي يُمْسِكُ السَّمَاوَاتِ وَالْاَرْضَ اَنْ تَزُوْلَا وَلَئِنْ زَالَتَا اِنْ اَمْسَكَهُمَا مِنْ اَحَدٍ مِّنْ بَعْدِهِ اِنَّهُ كَانَ حَلِيْمًا غَفُوْرًا".
قال الامام الشافعي رحمه اللہ: فما احتجت معه الى طبيب قط بإذن الله تعالى فإنه هو الشافي
.
(حیاة الحيوان:١/١٣٦،ط،دارالبشائر)

دعا کے معاملے میں الفاظ کا درست ہونا کافی ہوتا ہے، بشرطیکہ اس کی نسبت آپ علیہ السلام کی طرف نہ کی جائے، لہذا اس دعا کو پڑھنا یا مجربات کے طور پر استعمال کرنے میں کوئی حرج نہیں۔

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 1437
imam shafi rahi mahullah ki taraf mansoob aik waqiya ki tehqeeq, authentication / Investigation of an incident attributed to Imam Shafi'i

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Miscellaneous

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2022.