عنوان: بچوں کی سہولت کی خاطر تیسویں سپارے کی ترتیب بدلنا کیسا ہے؟ (103340-No)

سوال: السلام علیکم، مفتی صاحب! ہمارے مدارس میں چھوٹے بچوں کو عم سپارہ پڑھانے کے لئے اس کی ترتیب کو تبدیل کر دیا جاتا ہے، اور سورہ الناس سے عم سپارہ شروع کیا جاتا ہے، کیا اس طرح سپارے کی ترتیب بدلنا جائز ہے؟

جواب: واضح رہے کہ چھوٹے بچوں کی سہولت کی خاطر سپارے کی ترتیب بدلنا جائز ہے، تاکہ وہ چھوٹی سورتوں سے شروع کر سکیں۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

کما في الدر المختار مع الشامیۃ:

ویکرہ الفصل بسورۃ قصیرۃ ، وأن یقرأ منکوسًا ۔ الدر المختار ۔ قال الشامي رحمہ اللہ تعالی : قولہ : (وأن یقرأ منکوسًا) بأن یقرأ في الـثانیۃ سورۃ أعلی مـمـا قـرأ في الأولی ، لأن ترتیب السور في القراء ۃ من واجـبات التلاوۃ ، وإنما جوّز للصغار تسہیلا لضرورۃ التعلیم ۔

(باب صفۃ الصلاۃ،مطلب الاستماع للقرآن فرضُ کفایۃ،ج:۲،ص:۲۶۹،بیروت)

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی
Print Views: 198
Bachon ki sahoolat ki khaatir teeswain siparay ki tarteeb badalna, saulat, khatir, paaray, What is it like to change the order of the thirtieth Juz for the convenience of children?, Thirtieth para

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Interpretation of Quranic Ayaat

Copyright © AlIkhalsonline 2021. All right reserved.

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com