عنوان: دوران طواف بلند آواز سے ذکر کرنا(3638-No)

سوال: السلام علیکم، مفتی صاحب! بعض حضرات کو دیکھا گیا ہے کہ وہ طواف کرتے وقت زور زور سے ذکر کرتے ہیں، اور طواف کے دوران پڑھنے والی دعائیں بلند آواز سے پڑھتے ہیں، جس سے طواف کرنے والوں کو پریشانی ہوتی ہے، کیا شرعاً اس طرح بلند آواز سے ذکر کرنا صحیح ہے؟

جواب: واضح رہے کہ طواف کے دوران اس طرح بلند آواز سے ذکر و دعا کرنا کہ جس سے طواف کرنے والوں کو تشویش ہو، مکروہ ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

ارشاد الساری: (باب انواع الاطوفۃ و احکامھا، ص: 234)
ورفع الصوت ولو بالقرآن والذکر والدعاء ای بحیث یشوش علی الطائفین والمصلین۔

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 780 Feb 25, 2020
Dauran, Tawaf, Tawaaf, Dauran e Tawaf, Dauran-e-Tawaf, buland, aawaaz, awaz, say, zikr, zikar, karna, Doing zikr, alound, during, in, Tawaaf, Tawaf, Dhikr

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Hajj (Pilgrimage) & Umrah

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.