عنوان: "خدا کچھ نہیں کرسکتا، عیسی بن مریم سب کرسکتے ہیں" کہنے کا حکم (105121-No)

سوال: مفتی صاحب! ایک بہت ہی اہم مسئلہ پوچھنا ہے، میرے ایک دوست نے غصے میں آکر کر یہ الفاظ کہہ دیے کہ "خدا کچھ نہیں کر سکتا، عیسیٰ بن مریم سب کر سکتے ہیں" اور بھی اس قسم کے الفاظ کہے، اس کے بارے میں کیا حکم ہے، کیا وہ کافر ہوگیا؟ اور اس کے نکاح کے متعلق بھی بتادیں۔

جواب: صورت مسؤلہ میں جو الفاظ آپ کے دوست نے کہے ہیں، ان الفاظ کی وجہ سے وہ دائرہ اسلام سے خارج ہوگیا، لہذا آپ کے دوست کو فی الفور ان الفاظ کے ذریعے کی گئی گستاخی سے معافی مانگ کر تجدید ایمان اور تجدید نکاح کرنا ضروری ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

وفی الصارم المسلول علی شاتم الرسول:

قالوا: سب اللہ تعالی کفر محض وھو حق اللہ وتوبۃ من لم یصدر منہ الا مجرد الکفر الاصلی او الطاری مقبولۃ مسقطۃ للقتل بالاجماع۔۔۔۔۔الخ

(الصارم المسلول علی شاتم الرسول ص:391)

وفی الشامیۃ:

ما یکون کفراً اتفاقا یبطل العمل والنکاح۔۔۔۔۔۔ وما فیہ خلاف یومر بالاستغفار والتوبۃ و تجدید النکاح۔

(الدرالمختار علی ہامش رد المحتار باب المرتد ج:2 ص: 414 ط۔سعید)

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی
Print Full Screen Views: 180
khuda kuch nahi karsakta esa bin marium sab kar sakty hain kehe ka hukum

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Beliefs

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © AlIkhalsonline 2021.