عنوان: "آسیہ" اور "عاصیہ" نام رکھنے کا حکم (105170-No)

سوال: مفتی صاحب ! آسیہ نام رکھنا کیسا ہے؟ اور مسلم كى حديث نمبر ٥٣٣٣ جس كے مطابق نبی صلی الله عليه وعلى اله وصحبه وسلم نے اس نام کو تبديل كر كے جمیلہ رکھا تھا، کی صحت كے بارے میں بھی آگاہ فرمادیں۔ جزا ک الله خير

جواب: واضح رہے کہ "آسیہ" نام رکھنا صحیح ہے، البتہ "عاصیہ" عین اور صاد کے ساتھ نام رکھنا غلط ہے، کیونکہ اس کا معنی گناہگار عورت کے ہیں، اور صحیح مسلم کی روایت میں "عاصیۃ" نام کی تبدیلی کے بارے میں بیان کیا گیا ہے، نہ کہ "آسیہ" نام کی تبدیلی کے بارے میں۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

لما فی الصحیح لمسلم:

٥٥٧٠ -(١٥) حَدَّثَنَا أَبُو بَكْرِ بْنُ أَبِي شَيْبَةَ ، حَدَّثَنَا الْحَسَنُ بْنُ مُوسَى ، حَدَّثَنَا حَمَّادُ بْنُ سَلَمَةَ ، عَنْ عُبَيْدِ اللَّهِ ، عَنْ نَافِعٍ ، عَنِ ابْنِ عُمَرَ : أَنَّ ابْنَةً لِعُمَرَ كَانَتْ يُقَالُ لَهَا عَاصِيَةُ فَسَمَّاهَا رَسُولُ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ جَمِيلَةَ".

(تكملة فتح الملهم: ١٠/ ١٨٥، كتاب الأدب: باب استحباب تغيير الإسم القبيح إلى حسن..إلخ)


وکذا فی المشکوٰۃ المصابیح:

وعن ابن عمر : ’’ أن بنتاً کانت لعمر یقال لہا : عاصیۃٌ ، فسمّاہا رسول اللہ ﷺ جمیلۃً ‘‘ ۔ رواہ مسلم
(۳/۱۳۴۵ ، رقم الحدیث : ۴۷۵۸ ، کتاب الآداب ، باب الأسامي ، الفصل الأول)

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی

(مزید سوالات و جوابات کیلئے ملاحظہ فرمائیں)

http://AlikhlasOnline.com

عورتوں کے مخصوص مسائل (پاکی و ناپاکی، حجاب، زیب و زینت) میں مزید فتاوی

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Women's Issues

20 Sep 2020
01 Safar 1442

Copyright © AlIkhalsonline 2020. All right reserved.

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com