عنوان: کیا طواف کے دوران قرآن کی مجید کی تلاوت کرسکتے ہیں؟(6024-No)

سوال: اگر کوئی شخص طواف کر رہا ہو، اور اس دوران قرآن کی تلاوت کرنا چاہے، تو کیا طواف کے دوران قرآن مجید کی تلاوت کرسکتا ہے؟

جواب: طواف کے دوران قرآن مجید کی تلاوت کرنے کی گنجائش ہے، لیکن بلند آواز سے تلاوت نہ کرے، البتہ طواف کے دوران ذکر کرنا قرآن کریم کی تلاوت سے افضل ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

غنیۃ الناسک: (ص: 65)
الذکر افضل من القراءۃ فی الطواف کذا فی التجنیس وغیرہ وھو باطلاقہ شامل للماثور وغیرہ فظھر ان القراءۃ فیہ خلاف الاولیٰ وان الذکر افضل منھا ماثوراً او لا الا اذا قرأ مافیہ ذکر علیٰ قصد الذکر لما صح عنہ ﷺانہ قال بین الرکنین ربنا آتنا فی الدنیا الآیۃ وکان ذلک اکثر دعائہ ﷺ۔۔۔۔۔۔قلنا ھدی النبی ﷺ ھو الا فضل ولم یثبت عنہ فی الطواف قرأۃ بل الذکر وھو المتوارث عن السلف والمجمع علیہ فکان اولیٰ فتح۔۔۔۔وفی الکافی للحاکم یکرہ ان یرفع صوتہ بالقرأۃ فیہ ولا بأس بقراءتہ فی نفسہ…الخ

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 2524 Dec 07, 2020
kia tawaf kay doran quran majeed ki tilawat karsakty hain?, Can a person recite the Quran during Tawaf?

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Hajj (Pilgrimage) & Umrah

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.