عنوان: احرام کی حالت میں کن جانوروں کو قتل کرنا جائز ہے؟(106945-No)

سوال: مجھے اس مسئلہ کی رہنمائی فرمادیں کہ احرام کی حالت میں کن جانوروں کو قتل کرنا جائز ہے؟

جواب: حنفيہ حضرات نے تمام احادیث کو مدِ نظر رکھتے ہوئے جن جانوروں کو حل و حرم اور احرام کی حالت میں قتل کرنا جائز لکھا ہے، وہ مندرجہ ذیل ہیں:

(1) سانپ (2) بچھو (3) بھیڑیا (4) چیتا (5) پاگل کتا (6) چوہا (7) چیل (8) مردار خور کوّا اور مذکورہ جانوروں کے علاوہ وہ جانور جو محرم پر حملہ کرنے میں پہل کریں۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

کما فی اعلاء السنن:

عن عائشۃ، قالت: امر رسول اﷲ ﷺ بقتل خمس فواسق فی الحل والحرم: الغراب، والحداۃ، والعقرب والفارہ والکلب العقور۔وأخرجہ أبو عوانۃ فی المستخرج من طریق المحاربی عن ھشام عنھا بلفط ست وزاد: الحیۃ، وھو کذلک عند مسلم بطریق شیبان عن ابن عمر، فزاد الحیۃ، ولم یقل فی اولہ: خمساً ولاستا، وقد وقع فی حدیث ابی سعید عند ابی داؤد نحو روایۃ شیبان، وزاد السبع العادی۔ وفی حدیث ابی ھریرۃ عند ابن خزیمۃ وابن المنذر زیادۃ الذئب والنمر، فتصیر تسعاً، وفی روایۃ سعید بن المسیب عن عائشۃ عند مسلم: الغراب الابقع۔
(ج: 10، ص: 385)

وفی الشامیۃ:

(ولا شيء بقتل غراب) إلا العقعق على الظاهر ظهيرية۔۔۔۔۔۔۔(وحدأة)۔۔۔(وذئب وعقرب وحية وفأرة)۔۔۔۔۔۔(وكلب عقور)۔۔۔۔۔۔۔(وسبع) أي حيوان (صائل) لا يمكن دفعه إلا بالقتل۔۔۔الخ
(ج: 2، ص: 570، ط: دار الفکر)

کذا فی نجم الفتاوی:
(ج: 3، ص: 621)

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی
Print Full Screen Views: 157
ihram ki halat mai kin janwaron ko qatal karna jaiz hai?

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Hajj (Pilgrimage)

Copyright © AlIkhalsonline 2021. All right reserved.

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com