عنوان: صاحب نصاب والدین کی بالغ اولاد کو زکوٰۃ دینے کا حکم (7380-No)

سوال: السلام علیکم، جناب ! میری بیوہ خالہ کے پاس تقریبا دو لاکھ روپے ہیں، اور ان کے دو بچے بالغ ہیں تو بچوں کو میں زکوۃ دے سکتا ہوں؟ جزاک اللہ

جواب: صورت مسئولہ میں اگر آپ کی بیوہ خالہ کی بالغ اولاد صاحب نصاب نہیں ہے، تو ان کو زکوٰۃ دی جاسکتی ہے، والدین کے صاحب نصاب ہونے سے بالغ اولاد صاحب نصاب شمار نہیں ہوتی ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

الفتاوى الهندية: (189/1)
"ولايجوز دفعها إلى ولد الغني الصغير، كذا في التبيين. ولو كان كبيراً فقيراً جاز، ويدفع إلى امرأة غني إذا كانت فقيرةً، وكذا إلى البنت الكبيرة إذا كان أبوها غنياً؛ لأن قدر النفقة لايغنيها، وبغنى الأب والزوج لاتعد غنية، كذا في الكافي"

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

Print Full Screen Views: 1039 Apr 27, 2021
saahib e nisab walidain ki baaligh olaad ko zakat dene ka hukum, Order to give Zakat to adult children of Sahib Nisab parents

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Zakat-o-Sadqat

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2024.