عنوان: کیا مجبور مزنیہ پر حد زنا جاری ہوگی؟(107559-No)

سوال: اگر کسی عورت کو زنا پر راضی نہ ہونے کی صورت میں جان سے مارنے کی دھمکی دے جائے اور وہ عورت جان بچانے کی غرض سے اپنے آپ کو زنا کے لئے پیش کردے اور اس سے زنا کرلیا جائے، تو کیا اس عورت پر حد زنا جاری ہوگی؟

جواب: اگر کوئی عورت اکراہ اور جبر کی وجہ سے اپنے آپ کو زنا کے لئے پیش کرے اور اس سے زنا کیا جائے، تو مذکورہ عورت پر حد زنا جاری نہیں ہوگی، بلکہ شبہ کی وجہ سے ساقط ہو جائے گی۔

دلائل:

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔


کما فی بدائع الصنائع:

واما فی حق المراۃ فلا فرق بین الاکراہ التام والناقص ویدرأ بالحد عنہا فی نوعی الاکراہ لانہ لم یوجد منھا فعل الزنا بل الموجود ھو التمکین وقد حرج من ان یکون دلیل الرضا بالاکراہ فیدرأ عنھا الحد۔

(کتاب الاکراہ، ج: 7، ص: 181، ط: رشیدیہ)

وفی الفقہ الاسلامی وادلتہ:

فاذا اکرھت المرأۃ علی الزنا فلا یقام علیھا الحد عند جمہور الفقھاء سواء أکان الاکراہ تاماً ام ناقصاً۔

(المبحث الثالث فی اثر الاکراہ، ج: 5، ص: 400، ط: حبیبیہ)

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی
Print Full Screen Views: 400
kia majboor muzniya par had jaari hogi?

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Miscellaneous

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2022.