عنوان: شوہر کی اجازت کے بغیر حج پر جانے کا حکم(108673-No)

سوال: مفتی صاحب ! میرے شوہر اپنا فریضہ حج ادا کر چکے ہیں، مجھ پر اب حج فرض ہوگیا ہے، اور میں اپنے بیٹے یا بھائی کے ساتھ حج پر جانا چاہتی ہوں، لیکن میرے شوہر حج پر جانے سے منع کررہے ہیں، کیا میں شوہر کی اجازت کے بغیر حج پر جا سکتی ہوں؟

جواب: اگر آپ پر حج فرض ہو گیا ہے، اور آپ اپنے کسی محرم کے ساتھ حج پر جانا چاہتی ہیں، تو آپ کے شوہر آپ کو فرض حج کی ادائیگی سے نہیں روک سکتے، اگر شوہر آپ کو حج فرض کی ادائیگی سے روکے، تو آپ شوہر کی اجازت کے بغیر بھی محرم کے ساتھ حج پر جا سکتی ہیں۔

دلائل:

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔


الدرالمختارمع الرد:(465/2،ط:دارالفکر)
وليس لزوجها منعها عن حجة الإسلام
(قوله وليس لزوجها منعها) أي إذا كان معها محرم وإلا فله منعها كما يمنعها عن غير حجة الإسلام

فتاوی عثمانی:(203/2،ط:مکتبۃمعارف القرآن)

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص،کراچی

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Hajj (Pilgrimage)

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2022.