عنوان: "اللہ تعالیٰ نے ساری زمین کے ہر حصے سے ایک مٹھی مٹی لے کر اس سے آدم علیہ السلام کو پیدا کیا... الخ حدیث کی تحقیق (108699-No)

سوال: السلام علیکم، مفتی صاحب ! مندرجہ ذیل حدیث شریف کی صحت کے بارے میں تصدیق فرمائیں: رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: اللہ تعالیٰ نے ساری زمین کے ہر حصے سے ایک مٹھی مٹی لے کر اس سے آدم علیہ السلام کو پیدا کیا، چنانچہ ان کی اولاد میں مٹی کی مناسبت سے کوئی لال، کوئی سفید، کالا اور ان کے درمیان مختلف رنگوں کے اور نرم مزاج و گرم مزاج، بد باطن و پاک طینت لوگ پیدا ہوئے۔ (ترمذی، رقم الحدیث:2955)

جواب: سوال میں پوچھی گئی حدیث صحیح ہے اور حدیث کی مشہور کتاب "جامع الترمذی" میں مذکور ہے، ذیل میں اس حدیث کو مکمل سند، متن اور ترجمہ کے ساتھ ذکر کیا جاتا ہے:

حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ بَشَّارٍ، قال: حَدَّثَنَا يَحْيَى بْنُ سَعِيدٍ، وَابْنُ أَبِي عَدِيٍّ، ومحمد بن جعفر، وعبد الوهاب، قَالُوا:‏‏‏‏ حَدَّثَنَا عَوْفُ بْنُ أَبِي جَمِيلَةَ الْأَعْرَابِيِّ، عَنْ قَسَامَةَ بْنِ زُهَيْرٍ، عَنْ أَبِي مُوسَى الْأَشْعَرِيِّ، قَالَ:‏‏‏‏ قَالَ رَسُولُ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ:‏‏‏‏ "إِنَّ اللَّهَ تَعَالَى خَلَقَ آدَمَ مِنْ قَبْضَةٍ قَبَضَهَا مِنْ جَمِيعِ الْأَرْضِ، ‏‏‏‏‏‏فَجَاءَ بَنُو آدَمَ عَلَى قَدْرِ الْأَرْضِ، ‏‏‏‏‏‏فَجَاءَ مِنْهُمُ الْأَحْمَرُ وَالْأَبْيَضُ وَالْأَسْوَدُ، ‏‏‏‏‏‏وَبَيْنَ ذَلِكَ، ‏‏‏‏‏‏وَالسَّهْلُ وَالْحَزْنُ وَالْخَبِيثُ وَالطَّيِّبُ".
(جامع الترمذی: ٥/ ٧١، رقم الحديث: (٢٩٥٥)، باب ومن سورة البقرة)
وقال: هَذَا حَدِيثٌ حَسَنٌ صَحِيحٌ.


ترجمہ:
حضرت ابو موسیٰ اشعری رضی اللہ عنہ سے مروی ہے کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا: ”اللہ تعالیٰ نے ساری زمین کے ہر حصے سے ایک مٹھی مٹی لے کر اس سے آدم علیہ السلام کو پیدا کیا، چنانچہ ان کی اولاد میں مٹی کی مناسبت سے کوئی لال رنگ کا پیدا ہوا، کوئی سفید رنگ کا اور کوئی کالے رنگ کا پیدا ہوا، اور ان رنگوں کے درمیان مختلف رنگوں کے لوگ پیدا ہوئے اور جس طرح زمین نرم اور سخت ہوتی ہے، اسی طرح نرم طبیعت اور سخت طبیعت کے لوگ بھی پیدا ہوئے اور نیک اور برے لوگ بھی پیدا ہوئے۔

امام ترمذی رحمہ اللّٰہ نے اس حدیث کو "حسن صحیح" قرار دیا ہے۔

واللہ تعالیٰ اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی

دلائل:


واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی
Print Full Screen Views: 232

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Interpretation and research of Ahadees

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com

Copyright © Al-Ikhalsonline 2022.