عنوان: حضور اکرم ﷺ کا گریبان مبارک اور بٹن(107531-No)

سوال: مجھے یہ بتادیں کہ حضور اکرم ﷺ کا گریبان مبارک کہاں بنا ہوا تھا اور کیا حضوراکرم ﷺ کے گریبان پر بٹن تھے یا بنا بٹن کے گریبان تھا؟

جواب: حضور اکرم ﷺ کے سینہ پر گریبان مبارک تھا اور اس پر بٹن بھی لگے ہوئے تھے، جیسا آج کل عام رواج ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

کما فی المرقاۃ:

عن معاویۃ بن قرۃ عن ابیہ قال اتیت النبی ﷺ فی رھط من مزینۃ فبایعوہ وانہ لمطلق الازار فادخلت یدی فی جیب قمیصہ فمسست الخاتم (فی جیب قمیصہ ) قال السیوطی فیہ ان جیب قمیصہ کان علی الصدر کما ھوالمعتاد الآن فظن من لاعلم عندہ انہ بدعۃ ولیس کما ظن۔

(ج: 8، ص: 247)

وفی عمدۃ القاری:

باب جیب القمیص ای ھذا باب فی ذکر جیب القمیص الکائن عندالصدروکأنہ اشار بھذا الی ماوقع فی حدیث الباب من قولہ ویقول باصبعہ ھکذا فی جیبہ فان الظاھرانہ کان لابس قمیص وکان فی طوقہ فتحۃ الی صدرہ وعن ھذا قال ابن بطال کان الجیب فی ثیاب السلف عندالصدر۔

(ج: 21، ص: 302)

کذا فی نجم الفتاوی:

(ج: 1، ص: 340)

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی
Print Full Screen Views: 174

Find here answers of your daily concerns or questions about daily life according to Islam and Sharia. This category covers your asking about the category of Beliefs

Copyright © AlIkhalsonline 2021. All right reserved.

Managed by: Hamariweb.com / Islamuna.com